مرکز ابلاغ

امارات پوسٹ گروپ نے اپنی خدمات کا دائرہ سفارتی مشن تک بڑھا دیا ہے۔
31 JUL 2016

امارات پوسٹ گروپ نے اپنی خدمات کا دائرہ سفارتی مشن تک بڑھا دیا ہے۔

امارات پوسٹ گروپ نے غیر ملکی سفارت خانوں اور قونصلیٹ کے لیے جدید خدمات کی فراہمی کے ذریعے اپنی خدمات کا دائرہ کار سفارتی مشن تک بڑھا دیا ہے۔

مؤثر اور رازدارانہ خدمات کی فراہمی کے لیے ایک قابل اعتبار فراہم کار کی حیثیت سے اپنی شہرت بنانے کے بعد ای پی جی اب قونصلیٹ کی جانب سے کسٹمرز کو بھجی جانے والی اور ان سے وصول کی جانے والی دستاویزات کو بخوبی سنبھال رہا ہے۔ قونصلیٹ کے ساتھ کیے جانے دستخط شدہ معاہدے کے مطابق ای پی جی ہر انفرادی قونصلیٹ کے لیے خصوصی ٹیم مخصوص کردیتا ہے اور بعض صورتوں میں کام کوزیادہ بہتر طریقے سے انجام دینے کے لیے اپنا ایک ملازم یا ایک ٹیم قونصلیٹ کی حدود میں بیٹھا دی جاتی ہے۔

اس وقت امارات پوسٹ گروپ یہ خدمات متحدہ امریکہ، شام، فلپائن اور افغانستان کے سفارت خانوں / قونصلیٹ کے لیے فراہم کررہا ہے۔

" اس طرح کے خفیہ دستاویزات کو سنبھالنے کے اپنے کئی سالہ تجربے کی بدولت امارات پوسٹ گروپ اس میدان میں کافی اچھی ساکھ بنا چکا ہے۔ جن غیر ملکی سفارت خانوں اور قونصلیٹ کو ہم خدمات فراہم کر رہے ہیں ان کی تعداد میں پچھلے کئی مہینوں سے اضافہ ہورہا ہے۔" اس بات کا اظہار امارات پوسٹ گروپ کے چیف کمرشل آفیسر جناب ابراہیم بن کرم نے کیا۔

"ای پی جی پر سفارتی مشن کے بھروسے کا معیار بہت ہی زیادہ ہے اس کی وجہ ہمارا مجموعی تجربہ ہے جو معیاری خدمات کی مسلسل فراہمی کو یقینی بناتا ہے۔" جناب بن کرم نے مزید کہا۔ " ایک وفاقی ادارے کی حیثیت سے ای پی جی اعلیٰ سطح کی رازداری اور سیکورٹی پیش کرتا ہے جو کے بہت اہم عوامل ہیں جن کا میل روم کا ٹھیکہ دیتے وقت کوئی بھی سفارتی مشن خاص طور پر خیال رکھتا ہے۔ ہم بہت خوش ہیں کہ ہم ان کی توقعات پر پورا اترے ہیں۔"

سفارتی مشن کے مشکل میل روم کی ضروریاتوں کو سنبھالنے میں پیچیدہ رسد اورگہری منصوبہ بندی شامل ہوتی ہے۔ اپنے وسیع مراسلاتی نیٹ ورک، ثابت شدہ مہارت اور غیر معمولی کورئیر خدمات کی وجہ سے امارات پوسٹ گروپ کو اس میدان میں اپنے حریفوں پر واضح برتری حاصل ہے۔


شارك برأيك
X
صوت العميل
لائیو چیٹ