مرکز ابلاغ

وزارتِ مالیات اور ای پی جی نے ڈاک خانوں پر ای۔درہم کارڈز کی فروخت اور ریچارج کی مفاہمتی یادداشت پر دستخط کیے
26 MAY 2015

وزارتِ مالیات اور ای پی جی نے ڈاک خانوں پر ای۔درہم کارڈز کی فروخت اور ریچارج کی مفاہمتی یادداشت پر دستخط کیے

وزارتِ مالیات (ایم او ایف) نے کسٹمرز کو یو اے ای کے 115 ڈاک خانوں میں سے کسی پر بھی ای درہم کارڈز کو چارج اور ری چارج کرنے کے قابل بنانے کے لیے امارات پوسٹ گروپ (ای پی جی) کے ساتھ ایک مفاہمتی یادداشت (ایم او یو) پر دستخط کیے ہیں.

ای پی جی کے چیف کمرشل آفیسر جناب ابراہیم بن کرم، ایم او ایف کے شعبۂ مالیاتی تخمینہ و وسائل کے ماتحت سیکرٹری جناب سعید راشد الیتیم، اور نیشنل بینک آف ابوظہبی (این بی اے ڈی) کے، حکومتِ یو اے ای اور وی وی آئی پی کلائنٹس کے سینئر مینیجنگ ڈائریکٹر جناب سیف الشحی نے دبئی میں واقع ایم او ایف کے دفتر میں اس مفاہمتی یادداشت پر دستخط کیے.

اس مفاہمتی یادداشت (ایم او یو) پر تبصرہ کرتے ہوئے جناب ابراہیم بن کرم کا کہنا تھا کہ یہ نئی خدمت ای پی جی کے جدید انتظامی اور تکنیکی نظامات کے ذریعے عوامی خدمت کی بجا آوری میں فوقیت اور جدت لانے کے عزم کی عکاسی کرتی ہے۔ گروپ کسٹمرز کے فائدے کی خاطر اعلیٰ درجے کے پیرویانہ طریقے بھی فراہم کرتا ہے۔ مزید برآں ای پی جی سمارٹ سروسز، موبائل اطلاقات اور آن لائن سروسز کے ذریعے بھی فراہم کر رہا ہے جو ہر ماہ 1.2 ملین زائرین کو اپنی جانب متوجہ کرتا ہے اور 94 فیصد شرح اطمینان حاصل کرتا ہے.

الیتیم صاحب نے مزید کہا:"اس معاہدے کی رو سے امارات پوسٹ ای درہم سسٹم کارڈ کی فروخت، چارجنگ اور ری چارجنگ کا مجاز ہے جو اس نظام کی افادیت میں ایک نیا اضافہ ہے۔ ای پی جی مقامی اور عالمی جغرافیائی توسیعی پالیسی پرعمل پیرا ہے اور برقی نظام کو اپناتے ہوئے ای سروسز کی استعداد کو بہتر بنا کر اور عملیاتی لاگت کو کم کرتے ہوئے ایک قومی منصوبہ ہونے کی حیثیت سے ای درہم نظام کی ترقی میں مزید اضافہ کررہا ہے.


شارك برأيك
X
صوت العميل
لائیو چیٹ